Ask Ghamidi

A Community Driven Discussion Portal
To Ask, Answer, Share And Learn

Forums Forums Sources of Islam Ahadith About Qustuntuniya (constantinople) And Yazeed Ibn-e-muawiya

  • Ahadith About Qustuntuniya (constantinople) And Yazeed Ibn-e-muawiya

    Muzammil Chandio updated 1 year, 9 months ago 2 Members · 6 Replies
  • Dr. Irfan Shahzad

    Scholar May 4, 2022 at 4:08 am

    what contradiction you found?

  • Muzammil Chandio

    Member May 4, 2022 at 9:02 pm

    Ye hadees jo main ne ooper refrence main di hai log ye kehty hain ke yazeed ibne muwayia ke lie hai aur unhon ne qustuntunia par charhai ki thy to us hisab se wo jannati hain.

    Kia waqe’e ese koi hadees mojood hai ahadees ke zakhiry main,agar waqe’e mojood hai to kia ap wo with refrence bata sakty hain?

  • Dr. Irfan Shahzad

    Scholar May 5, 2022 at 6:00 am

    اپ نے اوپر ریفرنس کے ساتھ ہی حدیث لگائی ہوئی ہے۔ یہ قابل قبول حدیث ہے اور یہ بھی درست ہے کہ قسطنطنیہ پر حملے کے لیے جانے والے پہلے لشکر کی قیادت یزید بن معاویہ نے کی تھی۔ خدا اس بشارت میں یزید کو شامل ہونے کا پورا امکان موجود ہے

  • Muzammil Chandio

    Member May 5, 2022 at 11:51 pm

    Ap ki baat sahi hai main ne bhi apny baron se yahy suna hai lekin koi refrence nahy dia unhon ne.kia is baat ka koi refrence hai jo refrence main chata hun ke us lashkar kia kayadat yazeed bin muawyah ne ki hai.mujhy ye refrence kahen se nahy mil raha,na kisi hadees se,na hi kisi history se agar ap ke pass hai kindly ap share karen bohat shukria.

  • Dr. Irfan Shahzad

    Scholar May 6, 2022 at 12:30 am

    سیدنا محمود بن الربیع ؓ بیان کرتے ہیں کہ میں نے ایک حدیث ایک ایسی قوم کے سامنے بیان کی کہ جس میں سیدنا ابوایوب انصاریؓ رسول اللہﷺ کے صحابی شامل تھے اور یزید بن معاویہ ان پر اَمیر تھے، روم کی سرزمین میں۔‘‘ (صحیح بخاری: ج۱؍ ص۱۵۸ تاریخ الصغیر: ص۷۴)

    ’’سیدنا ابوایوب انصاریؓ نے یزید بن معاویہؓ کے زمانے میں جہاد کیاپھر وہ بیمارہوگئے پس اُنہوں نے فرمایا: مجھے روم کی سرزمین میں جہاں تک ہوسکے لے جاناپھر مجھے دفن کردینا۔‘‘(التاریخ الصغیر لامام بخاری: ص۶۵، طبع سانگلہ ہل)

    تاہم، اس میں اختلاف ہے کہ قسطننیہ پر یزید بن معاویہ کی قیادت میں یہ پہلا حملہ تھا یا نہیں۔ بعض لوگ پہلے حملہ اس لشکر کو قرار دیتے ہیں جس میں یزید بن معاویہ نہیں بلکہ عبد الرحمن بن خالد اس لشکر کے امیر تھے ۔

    واللہ اعلم

  • Muzammil Chandio

    Member May 9, 2022 at 9:01 am

    JazakALLAH

You must be logged in to reply.
Login | Register